حج کا فیصلہ 15 رمضان تک کیا جائے گا

اسلام آباد: وزیر مذہبی امور نور الحق قادری کا کہنا ہے کہ حج 2020 کے ہونے یا نہ ہونے کے حوالے سے فیصلہ 15 رمضان تک کردیا جائے گا، سعودی عرب کی جانب سے فیصلے سے متعلق پاکستان کو اعتماد میں لے کر باضابطہ طور پر آگاہ بھی کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق سعودی وزارت حج کی جانب سے حج 2020 کے ہونے یا نہ ہونے کے حوالے سے حتمی فیصلہ آئندہ ہفتے ہو سکتا ہے۔ اس حوالے سے وزارت مذہبی امور کے مطابق سعودی وزیر حج نے وزیر مذہبی امور پیر نور الحق قادری کے استفسار پر بتایا تھا کہ حج2020 کے ہونے یا نہ ہونے کے حوالے سے سعودی عرب سمیت دنیا بھر میں کورونا وائرس کی صورتحال کو مد نظر رکھ کر فیصلہ 15 رمضان تک کردیا جائے گا۔ انہوں نے توقع ظاہر کی ہے کہ حج کے حوالے سے حتمی فیصلہ آئندہ ہفتے کر دیا جائے گا جس کی باضابطہ اطلاع سعودی عرب کی جانب سے پاکستان کو بھی کی جائے گی۔

اس حوالے سے گزشتہ ماہ جاری ایک بیان میں وزیر مذہبی امور کا کہنا تھا کہ ان کی رائے میں رواں سال حج کا انعقاد مشکل ہے۔ سعودی فرماں روا تمام آپشنز دیکھ کر فیصلہ کرینگے۔ سعودی وزارت حج نے فی الوقت کوئی بھی معاہدہ کرنے سے روک رکھا ہے۔ سعودی حکومت کورونا پھیلاؤ کو مکمل طور پر دیکھ رہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ اس سال شاید سعودی عرب میں رہنے والے ہی صرف حج کی سعادت حاصل کرسکیں