ایس او پی پر عمل نہ کرنے پر کئی مارکیٹیں بند، دکانداروں کو گرفتار کر لیا گیا

اسلام آباد: حکومت کی جانب سے جاری کردہ ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے والی مارکیٹوں کو بند کر دیا گیا اور دکانداروں کو گرفتار کر لیا گیا۔

راولپنڈی کے علاقے راجہ بازار، صادق آباد اور کمرشل مارکیٹ میں کا روائی کرتے ہوئے انتظامیہ نے ایس او پیز پر عمل نہ کرنے والے دکانداروں کو گرفتار کر لیا اور سماجی فاصلے کی خلاف ورزی کرنے والی مارکیٹس کو بھی بند کر دیا گیا۔

وزیر اعظم کے معاون خصوصی شہباز گل نے ٹویٹر پر بیان جاری کرتے ہوئے کہاکہ ”نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے فیصلوں کے تناظر میں لاک ڈاؤن کی ایس او پی فالو نہ کرنے پر پورے ملک میں کئی بڑی مارکیٹوں کو آج بند کر دیا جائیگا۔ پنجاب اور کے پی کے میں آپریشن شروع کر دیا گیا ہے۔ ہم سب کو ہر صورت میں ایس او پی پر عمل کرنا ہو گا”۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کا اجلاس ہوا جس میں چیف سیکرٹری کورونا کے پڑھتے ہوئے کیسز سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ ملک کے بڑے شہروں کے بازار آج سے بند کروائیں جائیں۔ دکانیں اور بازاد بند کروانے کے لیے ایک ٹیم تشکیل دی گئی جو شام سات بجے کے بعد کھلنے والی دکانوں اور مارکیٹوں کو سیل کر دے گی۔

یہ بھی پڑھیں: سعودی عرب میں کورونا نے ایک پاکستانی ڈاکٹر کی جان لے لی

دوسری طرف تاجروں نے حکومت کے اس فیصلے کو مسترد کوتے ہوئے کہا کہ ملک بھر میں مارکیٹیں اور دکانیں بند کرنے کا فیصلہ عقل کے بر عکس ہے، ہمارا ملک مالی طور پر کمزور ہونے کی وجہ سے تاجروں کی کفالت نہیں کر سکتا، اگر آج مارکیٹیں بند کی گئیں تو آہستہ آہستہ سارا ملک بند کر دیا جائے گا۔