مہاتیر محمد کو ان کی پارٹی سے ہی نکال دیا گیا

کولا لمپور: ملائشیا کے سابق وزیرا‏عطم مہا تیر محمد کو اپنی ہی پارٹی سے برطرف کر دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق ملائشیا کی نئی حکومت کی حمایت نہ کرنے انہیں اپنی ہی پارٹی ” یونائیٹڈ انڈیجنس” سے نکال دیا گیا ہے، مہا تیر محمد 18 مئی کو اپوزیشن کے ساتھ بیٹھے تھے جس کے بعد ان کی اپنی سیاسی جماعت نے انہیں پارٹی کے صدارتی عہدے سے ہٹا دیا ہے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق جمعرات کے روز مہا تیر محمد کی پارٹی کی طرف سے ایک بیان جاری کیا گیا جس میں انہوں نے بتایاکہ مہا تیر محمد اب پارٹی کے رکن نہیں دہے اور پارٹی کے اندر ان کے اثرو رسوخ کو ختم کر دیا گیا ہے۔ ملائیشیا کے موجودہ صدر بیریسٹو اور وزیراعظم محی الدین کی حمایت نہ کرنے پر انکو پارٹی کی صدارت سے ہٹا دیا گیا، ملائیشیا کے صدر اور وزیراعظم نے اپنے لیے انہیں خطرہ قرار دیا اور اپنا اسرو رسوخ استعمال کرتے ہوئے انہیں اپنی ہی پارٹی سے نکلوا دیا۔

یہ بھی پڑھیں: شہباز شریف کا وزیراعظم عمران خان کی اہلیہ پر زاتی حملہ

واضح رہے کہ مہا تیر محمد جن کی عمر قریبا 95 برس ہونے کو ہے، وہ دنیا کے سب سے بوڑھے سیاسی رہنما تھی لیکن رواں سال فروری میں انہوں نے اپنا اقتدار چھوڑ کر استعفی دے دیا تھا، لیکن انہوں پھر فیصلہ کیا کہ وہ وزیراعظم بنے گیں۔ انہوں ملائیشیا کی موجودہ حکومت کی مزمت کی اور غدار قرار دیا۔