مودی کو ڈرپوک کہنے پر بھارتی کرکٹرز شاہد آفریدی پر تنقید کرنے لگے

ممبئی: پاکستانی آل راؤنڈر شاہد خان آفریدی نے آزاد کشمیر میں راشن تقسیم کرنے کی تقریب کے دوران خطاب کرتے ہوئے پاک فوج کے ہاتھوں گرفتار ہونے والے بھارتی پائلٹ ابھی نندن کو چوزہ اور نریندر مودی کو ڈرپوک قرار دیا ہے جس پر بڑے بڑے بھارتی کرکٹرز پر تنقید کر رہے ہیں۔

گزشتہ روز شاہد آفریدی نے کہا تھا کہ کورونا وائرس سے بھی بڑی بیماری مودی کے دل و دماغ میں ہے اور وہ بیماری مذہب کی بیماری ہے۔

شاہد آفریدی کا کہنا تھا کہ ایک عرصے کشمیریوں پر ہونے والے ظلم کا حساب مودی کو دنیا و آخرت میں دینا پڑے گا۔ آفریدی کا کہنا تھا کہ مودی دلیر بننے کی کوشش کرتا ہے مگر ہے بہت ڈرپوک، بھارتیوں کو آئینہ دکھانے پر کئی بھارتی کرکٹرز آفریدی سے ناراض ہو گئے اور سوشل میڈیا کے ذریعے اپنے دل کا غبار نکالنے کی کوشش کی۔

یہ بھی پڑھیں: پاکستان قیامت تک کشمیر آزاد نہیں کروا سکتا، بنگلادیش یاد ہے؟ گوتم گھمبیر

سابق بھارتی بلے باز یووراج سنگھ نے لکھا کہ وہ انسانیت کی بنیاد پر شاہد آفریدی کی فاؤنڈیشن کو سپورٹ کر رہے تھے مگر بھارتی وزیراعظم کے بارے میں ایسے کلمات برداشت نہیں کر سکتے اس لیے وہ اب کبھی آفریدی کی حمایت نہیں کریں گے۔

گوتم گمبھیر، شیکھردھون اور سریش رائنا نے بھی حقیقت سے آنکھیں پھیرتے ہوئے بھارتی انتہاپسندوں کو خوش کرنے کی کوشش کی اور آفریدی کو سوشل میڈیا پر تنقید کا نشانہ بنایا